سات بیماریاں جن کا فزیوتھراپی کی مدد سے علاج ممکن ہے

physiotherapy
Reading Time: 3 minutes

یہ سوچ عام ہے کہ فزیوتھراپی بس چند ورزشوں تک محدود ہے جس کی ضرورت بہت کم لوگوں کو پڑتی ہے۔ حقیقت یہ ہے کہ  نہ صرف فزیوتھراپی کی مدد سے بہت سی بیماریوں کا علاج ممکن ہے بلکہ مریض کا معیار زندگی بہتر کرنے کا یہ ایک مجرب طریقہ ہے۔ آج ہم ایسی ہی کچھ بیماریوں کے بارے میں معلومات آپ تک پہنچا رہے ہیں جن میں فزیوتھراپی سے علاج حیران کن نتائج سامنے لا سکتا ہے۔ ان بیماریوں میں امراض قلب، دمہ، کمر درد، مثانے کی کمزوری، ہڈیوں کا بھربھرا پن، فریکچر، موچ اور فالج کے علاوہ دیگر کئی بیماریاں بھی شامل ہیں۔ اگر آپ کسی فزیوتھراپسٹ سے رابطہ کرنا چاہتے ہیں تو مرہم کی مدد سے کراچی یا لاہور کے بہترین فزیوتھراپسٹ سے اپائنٹمنٹ بک کروائیے۔

آئیے دیکھتے ہیں کہ مختلف بیماریوں میں فزیوتھراپی آپ کو کیا کیا فائرے پہنچا سکتی ہے۔

امراض قلب

دل کی بیماری سے تحفظ فراہم کرنے میں فزیوتھراپی کارگر ہے ہی لیکن دل کی بیماریوں کا شکار افراد بھی اس طریقہ علاج سے مستفید ہو سکتے ہیں۔ فزیوتھراپسٹ آپ کو وزن مقررہ حد میں رکھنے اور اس کو کم کرنے میں مدد کر سکتا ہے۔ کولیسٹرول لیول کو صحت مند حدود میں رکھنا دل کے مریضوں کے لیے از حد اہم ہے۔ فزیوتھراپی اس میں آپ کی مدد کر سکتی ہے۔ وہ لوگ جن کو دل کا دورہ پڑ چکا ہو ان کے لیے فزیوتھراپی ری ہیبیلیٹیشن پروگرامز بہت ضروری ہیں۔ ان طریقوں سے وہ نہ صرف بہتر محسوس کر سکیں گے بلکہ ان کے دل کی صحت پر بھی مثبت اثرات مرتب ہوں گے۔ پاکستان کے کسی بھی شہر سے ماہر امراض قلب سے رابطہ اور مشورہ کرنے کے لیے مرہم پلیٹ فارم کا استعمال کیا جا سکتا ہے۔

مثانے کی کمزوری

دنیا بھر میں کروڑوں افراد مثانے کی کمزوری کے باعث پیشاب کنٹرول کرنے کی صلاحیت میں کمی کا شکار ہیں۔ اس میں مرد و خواتین سب ہی شامل ہیں لیکن بہت کم لوگ یہ جانتے ہیں کہ اس صورتحال میں جزیوتھراہی کروانا کتنا فائدہ مند ثابت ہو سکتا ہے۔ فزیوتھراپسٹ آپ کے متاثرہ پٹھوں کے لیے ایک ایسا ایکسر سائز پروگرام تجوہز کر سکتا ہے جس کی مدد سے ان پٹھوں کو مضبوط کیا جا سکتا ہے اور متعلقہ علامات میں کمی لائی جا سکتی ہے۔

ہڈیوں کا بھربھرا پن

آسٹیوپروسس یا ہڈیوں کا بھربھرا پن ایک عام بیماری ہے جس کا سب سے بڑا شکار خواتین ہیں۔ کیا آپ جانتی ہیں کہ فزیوتھراپی کی مدد سے آپ اس بیماری اور میوقع خطرات کا بہتر مقابلہ کرنے کی صلاحیت پیدا کر سکتی ہیں۔ اس طریقی علاج کی مدد سے آپ کے لیے ایسی ورزشیں تجویز کی جا سکتی ہیں جن سے نہ صرف آپ کی ہڈیوں کو إجبوط کرنا ممکن ہے بلکہ مجموعی فٹنس اور توازن میں بہتری لا کر گر کر ہڈی ٹوٹنے کا امکان بھی بہت حد تک کم کیا جا سکتا ہے۔ لاہور کے بہترین فزیوتھراپسٹ سے رابطہ اور مشورہ کرنے کے لیے مرہن ویب سائٹ کا استعمال کیجیئے۔

بچوں کی بڑھوتری کے مسائل

بہت سے والدین اس بات سے پریشان رہتے ہیں کہ ان کا بچہ بروقت بیٹھ یا چل نہیں رہا۔ بچوں کی بڑھوتری کے دیگر مسائل اور ہائپر ایکٹیویٹی کی صورت میں بھی ایک پیڈیاٹرک فزیوتھراپسٹ سے علاج نہایت فائدہ مند ثابت ہو سکتا ہے۔

دمہ

سانس کی یہ بیماری متاثرہ افراد کے لیے وبال جان بنی نظر آتی ہے۔ دمہ کے مریض اگر دیگر علاج کے ساتھ ساتھ ایک فزیوتھراپسٹ سے بھی مشورہ کریں تو ان کے مرض کوقابو میں رکھنے اور معیار زندگی بہتر کرنے میں کافی مدد ملنا ممکن ہے۔

سر درد

سر درد کی کئی اقسام ہیں جن میں میگرین، کلسٹر ہیڈ ایک، سٹریس ہیڈ ایک شامل ہیں۔ فزیوتھراپسٹ سر درد کی قسم متعین کر کے ایسے اقدامات کر سکتا ہے جن کی مدد سے سر درد اور میگرین کی شکایات میں آرام مل سکتا ہے۔

کمر درد

کمر درد ایک عام شکایت ہے جس سے ہر عمر کے افراد بلا تفریق متاثر نظر آتے ہیں۔ فزیوتھراپی میں مساج اور ورزش کی مدد سے اس درد میں کمی لانا ممکن ہے۔ آپ حیران ہوں گے کہ چند آسان ورزشوں کی مدد سے اس درد سے آپ ہمیشہ کے لیے چھٹکارا پانے میں کامیاب ہو جائیں گے۔

اگر آپ بھی ایسی ہی کسی بیماری کا شکار ہیں تو ایک بار کسی اچھے فزیوتھراپسٹ سے مشورہ ضرور کریں۔ اس سے نہ صرف آپ علاج پر اٹھنے والا خرچ کم کر سکتے ہیں بلکہ اپنی مجموعی صحت میں بہتری لاکر زندگی سے بھرپور لچف بھی اٹھا سکتے ہیں۔

Share This:

The following two tabs change content below.
Sehrish
She is pharmacist by profession and has worked with several health care setups.She began her career as health and lifestyle writer.She is adept in writing and editing informative articles for both consumer and scientific audiences,as well as patient education materials.
Summary