پسینے کی بدبو کے اسباب اور بچنے کے6 آسان طریقے

Reading Time: 4 minutes

پسینے کی بدبو  اکثر افراد کو معاشرے میں شدید شرمندگی  سے دوچار کر سکتی ہے ۔ مگر پسینے کا آنا صحت کے لیۓ بھی ضروری ہے ۔

گرمی کے موسم میں جسم کو ٹھنڈک پہنچانے کےلیۓ قدرت نے ہمارے جسم میں ایک ںظام مرتب کیا ہے ۔جس کے تحت بیرونی درجہ حرارت کے بڑھنے کی صورت میں جسم میں موجود پسینہ پیدا کرنے والے گلینڈ پسینہ پیدا کر کے جسم کے مساموں سے باہر خارج کرتا ہے جس سے جسم کو ٹھنڈک ملتی ہے اور گرمی کا مقابلہ کرنے کی طاقت ملتی ہے

گرمی کے موسم میں پسینے کی بدبو کی وجوہات

پسینے کی بدبو
Image Credit: Stylecraze

یہ بات بہت سارے لوگوں کے لیۓ بہت حیرت انگیز ہو گی کہ پسینہ کی کوئی بو نہیں ہوتی ہے ۔ اور جسم میں سے آنے والی بدبو درحقیقت ان بیکٹیریا کے سبب ہوتی ہے جو کہ ہماری جلد پر موجود ہوتے ہیں اور پسینے سے مل کر پیدا کرتے ہیں ۔

یہ بیکٹیریا جسم پر موجود کیرٹن پروٹین کو توڑتے ہیں اور اس کے ٹوٹنے کے سبب جو بو پیدا ہوتی ہے لوگ اس کو پسینے کی بد بو قرار دیتے ہیں ۔ ہر انسان کے جسم کی یہ اپنی خاص بو ہوتی ہے جو کہ بعض اوقات بہت ناگوار بھی ہو سکتی ہے

پسینے کی زيادتی کی بیماری علامات و علاج کے بارے میں جاننے کےلیۓ یہاں کلک کریں 

گرمی کے موسم میں پسینے کی بدبو کو دور کرنے کا طریقہ

کچھ لوگوں کے پسینے میں اس حد تک بدبو ہوتی ہے کہ لوگ ان کے ساتھ بیٹھنےکو تیار نہیں ہوتے ہیں مگر اس بو کو کم کرنے کے کچھ ایسے طریقے ہوتے ہیں جن کو اپنا کر اس بو سے بچا جا سکتا ہے

روزانہ نہانے کی عادت

روزانہ نہانے کی عادت جسم کو پسینے  کی بدبو سے بچانے میں اہم کردار ادا کر سکتی ہے کیوں کہ انسان جب نہاتا ہے تو اس کے جسم کے کچھ خاص حصوں میں جہاں پر بیکٹیریا گھر بنا لیتے ہیں ۔ جن میں بغلیں ، رانوں کےاندرونی حصے ، اور جنسی اعضا شامل ہیں ان حصوں کو دھونے سے  وہاں کے بیکٹیریا ختم ہو جاتے ہیں جس سے پسینہ آنے پر وہاں بدبو پیدا نہیں ہوتی ہے

ہائیڈروجن پر آکسائڈ کا استعمال

پسینے کی بدبو
Image Credit: Stylecraze

بعض افراد پسینے کی بدبو سے بہت پریشان ہوتے ہیں ۔ بار بار نہانے کے باوجود بھی ان کے جسم سے بد بو ختم نہیں ہوتی ہے ایسے افراد کو چاہیے کہ وہ ہائیڈروجن پر آکسائڈ کا استعمال کریں اس کے لیۓ ہائیڈروجن پر آکسائڈ کے محلول سےکسی کپڑے کو بھگو لیں

 اس بھیگے ہوۓ کپڑے سے جسم کے ان تمام حصوں کو اچھی طرح صاف کریں جہاں پر سے پسینے کی بد بو آتی ہے مٹال کے طور پر بغلوں ۔ چانکوں وغیرہ پر تو اس سے ان پوشیدہ جگہوں پر موجود بیکٹیریا صاف ہو جاتے ہیں

اور اس کےبعد جب ان حصوں پر پسینہ آتا بھی ہے تو اس میں بدبو نہیں ہوتی ہے ۔ اس عمل کو بار بار دہرانے کی ضرورت ہوتی ہے تاکہ ان جگہوں پر موجود بیکٹیریا کو ختم کیا جاسکے

پسینے والے کپڑوں کی تبدیلی

پسینے کی بدبو
Image credit: Koldunov/Getty Images

اکثر اوقات ورزش وغیرہ کرنےکی وجہ سے کپڑے پسینے سے بھیگ جاتے ہیں جن میں بیکٹیریا پیدا ہو جاتے ہیں ۔ یہ بیکٹیریا کپڑوں کے خشک ہونے کےبعد بھی بد بو کا باعث بنتے ہیں اس بدبو سے بچنے کے لیۓ یہ طریقہ لازمی ہے کہ ایسے کپڑے گرمی میں پہنے جائيں جو سوتی ہوں

اور جن میں ہوا کا داخلہ ہو سکے اسکے علاوہ کّپڑوں کے پسینے میں بھیگنےکے بعد ان کو فورا تبدیل کرنے کی عادت اپنانی چاہیے اس کے علاوہ روزانہ دھلے ہوۓ کپڑے پہننے سے بھی پسینے کی بدبو کو روکا جا سکتا ہے

غذا میں احتیاط

بعض غذائیں بھی بعض اوقات پسینے کی بدبو کو بڑھاوا دینے کا باعث بن سکتی ہیں مثال کے طور پر زیادہ مصالحے  والے کھانے ، زیادہ پیاز اور لہسن والے کھانوں سے بھی پسینے میں ان کی بو شامل ہو سکتی ہے اس وجہ سے گرمی کے موسم میں عام طور پر ایسے کھانے سے پرہیز کرنا چاہیے

اینٹی بیکٹیریل صابن اور ڈی آڈرنٹ کا استعمال

نہانے کے لیۓ اینٹی بیکٹیریل صابن کا استعمال اور نہانے کے بعد ڈي آڈرنٹ کا استعمال اگرچہ عارضی طور پر پسینے کی بدبو کو روک سکتا ہے مگر اس کا مستقل استعمال اس حوالے سے مفیڈ ثابت ہو سکتا ہے کہ اس سے پسینے کی ناگوار بو کا سلسلہ نہ صرف رک جاتا ہے بلکہ اس سے ایک خوشگوار خوشبو جسم کا حصہ بن جاتی ہے

پسینے کی بدبو
Image Credit: iStock

ڈاکٹر سے رجوع کرنا

بعض افراد زیادہ پسینہ آنے کی بیماری میں بھی مبتلا ہوتے ہیں اس بیماری کو ہائپر ہائیڈروسز کہا جاتا ہے اس بیماری کے شکار افراد کو بہت زیادہ پسینہ اتا ہے جس کی وجہ سے بیکٹیریا کی نمو بہت بڑھ جاتی ہے

اس وجہ سے پسینےکی زیادتی کی وجہ سے بدبو روکنے کی ہر تدبیر ناکام ثابت ہو جاتی ہے اس صورت میں جلد کے ماہر ڈاکٹر سے یا پھر اینڈو کرائن کے ماہر ڈاکٹر سے رجوع کرنا بہتر ثابت ہو سکتا ہے

لوگوں کے سامنے پسینے کے سبب ہونے والی بدبو کی وجہ سے ہونے والی شرمندگی سے بچنےکے لیۓ آپ بہت آسانی سے ماہر ڈاکٹروں سے آن لائن مشورہ کر سکتےہیں اس کےلیۓ مرہم ڈاٹ پی کے کی ایپ ڈاون لوڈ کریں یا پھر 03111222398 پر براہ راست رابطہ کریں