روزمرہ استعمال کی چیزیں جو مرد و خواتین میں بانجھ پن کا باعث بن سکتی ہیں

Women's Health
infertility
Reading Time: 4 minutes

آپ کے گھر میں موجود عام استعمال کی بہتت سی چیزیں ایسی ہیں جو بانجھ پن کی وجہ بن سکتی ہیں۔ آج کے دور میں بانجھ پن ایک عام مسئلہ بن چکا ہے۔ ہر چھ میں سے ایک شادی شدہ جوڑا اس مسئلے سے نبرد آزما ہے۔ اس کی بہت بڑی وجہ ہمارے ماحول میں کیمیائی مادوں کی بہتات ہے۔ یہ کیمیکل آپ کے بستر اور قالین سے لے کر آپ کے کھانا پکانے والے برتنوں تک میں شامل ہیں۔ ایسا لگتا ہے کہ ان سے بچائو کی کوئی راہ نہیں۔ لیکن خطرے سے آگاہ ہونا اس سے بچائو کی پہلی تدبیر ہے۔ آج ہم آپ کو آپ کے گھر اور ماحول میں موجود ایسے ہی کچھ خطرات سے آگاہ کرنے والے ہیں۔

آپ کا بستر اور صوفہ

بستر کے لیے استعمال ہونے والے گدوں اور صوفوں کی سیٹ پر اس طرح کے کیمیکلز لگائے جاتے ہیں جو آگ لگنے کی صورت میں ان کی حفاظت کریں۔ آگ لگنے کی صورت میں یہ یقینا ایک نہایت کارآمد چیز حفاظتی تدبیر ثابت ہوتی ہے لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ یہ کیمیکلز ان لوگوں کے لیے از حد خطرناک ہیں جو والدین بننا چاہتے ہیں۔ اس قسم کے فرنیچر سے یہ کیمیائی مادے خون میں جلد کے ذریعے شامل ہو جاتے ہیں۔ خون میں ان کی زیادتی سے مردو خواتین میں بانجھ پن کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔ اگر آپ بھی بایجھ پن کی مرض سے دوچار ہیں تو ایک اچھے گائناکالوجسٹ سے رابطہ اور مشورہ آپ کے لئے ضرروی ہے۔

اس قسم کے کیمیکلز سے بچنے کے لئے ہمیشہ  قدرتی مواد سے بنا بستر اور فرنیچر ہی استعمال کیجیئے۔

جراثیم کش صابن اور شیمپو

ایک اینٹی بیکٹیریل صابن کا استعمال جراثیم کی تعداد کو کم کرنے کے ساتھ ساتھ اولاد پیدا کرنے کی صلاحیت بھی کم کر سکتا ہے۔ ایسے صابنوں اور کئی قسم کے شیمپوز میں بھی   ایک کیمیکل پایا جاتا ہے جس کو ٹراکلوسان کہا جاتا ہے۔ اس کیمکل کے جلد کے ذریعے خون میں شامل ہونے سے اینڈوکراین گلینڈز کی کارکردگی متاثر ہوتی ہے۔  ہارمونز کی کمی بیشی مردوخواتین میں اولاد پیدا کرنے کی صلاحیت کم کر دیتی ہے۔

ہارمونز کی تبدیلیوں کی وجہ سے ہونے والے امراض میں ایک ایندوکرائنولوجسٹ سے دابطہ اور مشورہ کنا مفید ثابت ہو سکتا ہے۔

برتن دھونے کا صابن اور ٹوتھ پیسٹ

برتن دھونے میں استعمال ہونے والے صابن اور ٹوتھ پیسٹ میں بھی ٹراکلوسان کیمیکل پایا جاتا ہے۔ اس کی وجہ سے ہارمونز میں ہونے والی تبدیلیاں بے اولادی کا باعث بنتی ہیں۔ یہ تمام مصنوعات خریدتے ہوئے ان کےاجزا ضرور پڑھ لیجیئے اور وہی  ٹوتھ پیسٹ اور صابن خریدیئے جو  ٹراکلوسان سے پاک ہوں۔

ڑبہ بند خوراک

بی۔پی۔اے یا بس فینول۔اے وہ کیمیکل ہے جو پلاسٹک کی بوتلوں میں اور مائیکرویو اوون سیف  سلاسٹک کے ڈبوں میں پاتا جاتا ہے۔ یہی کیمیکل ایلومینیم کے ڈبوں اور رسیدوں کے لئے استعمال ہونے والے کاغذ میں بھی پایا جاتا ہے۔  بی۔پی۔اے مردوخواتین میں بے اولادی کا باعث بنتا ہے۔ بانجھ پن کے لئے کراچی   یا لاہور کے بہترین گائناکالوجسٹ سے مرہم کے ذریعے رابطہ کرنا نہایت آسان ہے۔

نان اسٹک پکانے کے برتن

نان اسٹک برتن پکانے اور صاف کرنے میں آسان ہوتے ہیں لیکن آپ کی تولیدی صحت کے لیے مشکل کا سامان پیدا کر سکتے ہیں۔ ان  کی کوٹنگ میں شامل کیمیکل پی۔ایف۔او۔اے خواتین میں حمل قائم ہونے میں رکاوٹ پیدا کرتا ہے۔ وہ خواتین جن میں اس کیمیکل کی سطح بلند ہوتی ہے ان کے پیدا ہونے والے بچے بھی بڑھوتری میں دوسرے بچوں کی نسبت پیچھے رہ جاتے ہیں۔ بچوں کی صحت کے سلسلے مین مدد اور رہمنائی کے لئے ایک اچھے چائلڈ سپیشلسٹ سے رابطہ کیجیئے۔

اپنے ماحول مین موجود ان خطرات کا ازالہ کیجیئے اور جلد ہی آپ کے آنگن میں خوشیوں کے پھول کھلیں گے۔

Few Most Popular Gynecologists in Pakistan:

Share This:

The following two tabs change content below.
Sehrish
She is pharmacist by profession and has worked with several health care setups.She began her career as health and lifestyle writer.She is adept in writing and editing informative articles for both consumer and scientific audiences,as well as patient education materials.