اور تم اپنے رب کی کون کون سی نعمتوں کو جھٹلائو گے؟

Healthy Lifestyle
how mechanism of autophagy sustains life?
Reading Time: 1 minute

سائنسدان کا اعزاز

مالیکیولر حیاتیات کے ماہر یوشینوری اوشومی طبیعیات 2016 کا نوبل انعام جیت چکے ہیں۔ ان کے کام کا دائرہ کار آٹو فیجی کے عمل کے گرد کھومتا ہے جس میں کہ خلیات خود اپنے آپ کو کھا کر ری سائیکل کرنے کا کام سر انجام دیتے ہیں۔ انسانی خلیات میں جاری یہ خودکار نظام دراصل قدرت کے کئی ایک کرشموں میں سے ایک ہے۔ اسی عمل کی بدولت خلیات نہ صرف کہ اپنی ضروریات پوری کرتے ہیں بلکہ جسم میں موجود فاسد مادوں اور بیماری پیدا کرنے والے جراثیم کا بھی خاتمہ کر سکتے ہیں۔

autophagy

خورد بین سے محبت

حیاتیات کے ماہرین انسانی زندگی کی بقا کے لیے اس عمل کی اہمیت سے واقف ہیں۔ دسمبر 2012 میں ٹوکیو انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کی ویب سائٹ پر ایک انٹرویو میں، اوشومی نے کہا کہ

اس کے تمام تحقیقاتی نتائج خوردبین کی محبت کے ساتھ شروع ہوا. انہوں نے مزید بتایا کہ “آپ کو زندگی کی نوعیت کے بارے میں اہم اور بنیادی سوالات کا جواب خمیر کے ذریعے مل سکتا ہے۔

بیماریوں سے بچائو میں معاون

اوسیومی خمیر کی جینیاتی دریافت میں مزید آگے بڑھنے کے لیے کوشاں ہیں۔ حیاتیات کے ماہرین بیماری اور صحت کے حالات میں آٹوفیجی کے عمل کی اہمیت کو تسلیم کرتے ہیں۔ ۱۹۹۹ میں آٹوفیجی کے عمل سے ٹیومر کے خلاف مزاحمت پیدا ہونے کے شواہد ملنے کے بعد سے اس خود کار نظام میں سائنسدانوں کی دلچسپی بڑھ چکی ہے او ر اس کے بارے میں مزید جاننے کے لیے کوششیں جاری ہیں۔

آٹوفیجی کے عمل سے کینسر کی روک تھام میں مدد مل سکتی ہے وہیں اس سلسلے میں کسی قسم کی رکاوٹ سے بہت سی بیماریوں کی راہ بھی ہموار ہوتی ہے ۔ اس قدرتی عمل کے رک جانے سے جن بیماریوں کا اندیشہ بڑھ جاتا ہے ان میں سر فہرست الزائمر اور ذیابیطس ہیں۔

molecular

اگر آپ الزائمر کی بیماری کے ماہرین سے رابطہ کرنا چاہتے ہیں تو مرہم ویب سائٹ کا استعمال کرتے ہوئے آپ کراچی، لاہور اور پاکستان کے تمام بڑے شہروں میں موجود بہترین نیورولوجسٹ سے مشورہ کر سکتے ہیں۔

براین

بے شک انسانی جسم قدرت کی بہترین تخلیق ہے۔ لیکن حضرت انسان ابھی خود شناسی کے ابتدائی مراحل میں سرگرداں ہیں۔ ایک چھوٹے سے انسانی خلیے میں مضمر یہ راز حیران کن بھی ہے اور رب کائنات کی انسان پر بے انتہا مہربانیوں پر شکر گزار ہونے کا موقعہ بھی۔

اور تم اپنے رب کی کون کون سے نعمتوں کو جھٹلائو گے۔

The following two tabs change content below.
Sehrish
She is pharmacist by profession and has worked with several health care setups.She began her career as health and lifestyle writer.She is adept in writing and editing informative articles for both consumer and scientific audiences,as well as patient education materials.