حمل کے نتیجے میں ہونے والی متلی کو روکنے کے 5 آسان طریقے

Reading Time: 4 minutes

متلی ایک ایسی عام علامت ہے جس کا سامنا 70 فی صد تک کی حاملہ خواتین کو کرنا پڑتا ہے ۔ صبح کے وقت جاگتے ہی متلی کا ہونا یا پھر دن بھر مختلف اوقات میں ایسی کیفیت کا ہونا اگرچہ ایک عام بات ہے مگر اس کا قطعی یہ مطلب نہیں ہے کہ اس کا کوئی علاج نیہں ہےاور حاملہ عورت کو حمل کے دوران مستقل طور پر اس کا سامنا کرنا پڑے گا ۔ بلکہ اس کا مختلف انداز میں علاج کر کے اس مشکل کو حل بھی کیا جا سکتا ہے

حمل کے دوران متلی کا آغاز

عام طور پر حمل کے ٹہرنے کے پہلے چار سے آٹھ ہفتوں کے درمیان متلی محسوس ہونا شروع ہو جاتی ہے جس کو حمل کی ابتدائی علامات کے طور پر سمجھا جاتا ہے ۔ جو کہ پہلے تین مہینوں کے دوران ہی آہستہ آہستہ کم ہو جاتی ہے یا ختم ہو جاتی ہے مگر کچھ خواتین کو اس تکلیف کا سامنا حمل کے پورے نو مہینوں کے دوران کرنا پڑتا ہے

حمل کے دوران متلی روکنے کے آسان طریقے

حمل ک دوران ابتدائی دنوں میں متلی کی کیفیت کو روکنے کے لیۓ اور اس سے بچنے کے لیۓ حاملہ ماں کو اپنے طرز زندگی میں کچھ تبدیلیاں ابتدائی طور پر کرنی پڑتی ہیں

پیٹ بھر کر کھانا نہ کھائیں

متلی
Image Credit: Mom Junction

حمل کے دوران ایک ماں کو اچھی غذا کی ضرورت ہوتی ہے لیکن اس متلی اور الٹی کی وجہ سے ایسا ہونا مشکل ہو جاتا ہے اس کے لیۓ حاملہ عورت کو پیٹ بھر کر بہت سارا کھانا کھانے کے بجاۓ ہر دو گھنٹوں کے بعد ہلکا کھانا کھانا چاہیے جو ان کے معدے پر بوجھ نہ ڈالے اور آسانی سے ہضم ہو جاۓ

ایسے وقت میں جسم کو پروٹین کی سب سے زیادہ ضرورت ہوتی ہے لہذا ایسی حالت میں ایسے کھانوں کا انتخاب کریں جس کی بو بہت تیز نہ ہو مثال کے طور پر اگر انڈہ کھانے سے بو آتی ہے تو اس کی جگہ پر دلیہ لیا جا سکتا ہے جو کہ پروٹین کی ضرورت بھی پورا کرتا ہے اور آسانی سے ہضم بھی ہو جاتا ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ زیادہ مصالحے والے کھانوں سے بھی احتیاط کرنی چاہیۓ ہے

ہلکی ورزش کریں

حمل کے ٹہر جانے کا قطعی یہ مطلب نہیں ہے کہ آپ اپنے شیڈول تبدیل کر لیں ۔ حمل کے دنوں میں بھی ہر روز تقریبا آدھے گھنٹے تک لازمی ہلکی ورزش کریں ۔ اس کے لیۓ اپنی ڈاکٹر سے رہنمائی لی جا سکتی ہے جو کہ آپ کو آپ کی کنڈیشن کے مطابق ورزش بتا سکتا ہے

ماہرین کی تحقیق کے مطابق وہ مائیں جو حمل کے ابتدائی دنوں میں ہلکی پھلکی ورزش جاری رکھتی ہیں انہیں متلی اور الٹی کی شکایت کا سامنا نہیں کرنا پڑتا ہے

اگر متلی بہت شدید ہو تو اس صورت میں

بعض خواتین میں اس علامت میں بہت شدت پائی جاتی ہے اور ان کو ہر وقت الٹی یا متلی محسوس ہوتی رہتی ہے ایسی خواتین اس کیفیت کو روکنے کے لیۓ ان چیزوں کا استعمال کرسکتی ہیں

متلی
Image Credit:Parents

ڈوکسی لامائن +پائرڈوکسن (وٹامن بی 6)

یہ وہ دوا ہے جو عام طور پر ڈاکٹر حمل کے سبب ہونے والی متلی کی صورت میں دیتے ہیں ۔یہ ایک گولی کی صورت میں ہوتی ہے جو کہ دس یا بیس ملی گرام کی پاور میں ملتی ہے ۔ مگر اس کے استعمال سے قبل اپنی گائنی ڈاکٹر سے مشورہ کرنا لازمی ضروری ہے اور حمل کی حالت میں کوئی بھی دوا اپنے ڈاکٹر کے مشورے کے بغیر نہ کریں

بینا ڈرائل

یہ دوا عام حالات میں الرجی کے مریضوں کو استعمال کرواتے ہیں لیکن ڈاکٹر اس دوا کو حمل کی حالت میں متلی روکنے کے لیۓ بھی دیتے ہیں اور اس سے فائدہ بھی ہوتا ہے مگر ایک بار پھر یاد رکھیں کہ کسی بھی دوا کا استمعال ڈاکٹر کے مشورے کے بغیر نہ کیا جاۓ

ادرک

ماہرین اس بات پر متفق ہیں کہ حمل کی حالت میں روزانہ ایک گرام تک ادرک کا استعمال اس متلی اور الٹی کی تکلیف کو روکنے میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے اس کے لیے ادرک کو خشک کر کے پاوڈر کی صورت میں بھی لیا جا سکتا ہے اور جب بھی متلی محسوس ہو تو اس کی چٹکی چاٹ لیں یا پھر چھوٹے سے ادرک کے ٹکڑے کو چبانے سے بھی افاقہ ہو سکتا ہے

الائچی اور لیموں

بار بار متلی محسوس ہونے پر لیموں کو چاٹنے سے اس میں افاقہ دیکھنے میں آیا ہے اس کے ساتھ ساتھ سبز الائچی بھی چبانے سے ایک جانب تو ہاضمہ بہتر ہوتا ہے اور دوسری جانب متلی کی کیفیت بھی ختم ہوتی ہے

ایکو پریشر پوائنٹ کا مساج

متلی
Image Credit: Pintrest

ایکو پریشر پوائنٹ پی 6 جو کہ ہاتھ سے نیچے کلائی کے مقام پر موجود ہوتا ہے ایکو پیجر کے ماہرین کے مطابق اس پوائنٹ پر دباؤ ڈالنے  سے اور یہاں مساج کرنے سے بھی متلی میں آرام ملتا ہے

یاد رکھیں

حالت حمل میں آپ کو ایک نازک صورتحال کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اور اس میں ہونے والے مسائل اور علامات ہر ایک عورت کے دوسری عورت سے مختلف ہوتے ہیں اس وجہ سے سنے سناۓ ٹوٹکوں پر عمل کرنے سے احتیاط کریں اور اس معاملے میں سب سے زیادہ اہمیت اپنے ڈاکٹر کے مشورے کو دیں

ماہر اور مستند گائنی ڈاکٹر سے مشورےکےلیۓ مرہم ڈاٹ پی کے کی ویب سائٹ وزٹ کریں یا پھر 03111222398 پر رابطہ کریں