صاف ہاتھ لاکھوں زندگیاں بچا سکتا ہے

Healthy Lifestyle
Washing hands regularly can save thousands of lives!

دنیا میں ہر سال 35 لاکھ سے زائد بچے صرف ہاتھ نہ دھونے کی وجہ سے لگنے والی بیماریوں کا شکار ہو کر موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں ۔بعض اوقات ایک انسان دوسرے سے صرف ہاتھ ہی نہیں ملا رہا ہوتا بلکہ انتہائی خطرناک اور جان لیوا قسم کی بیماریاں بھی دوسرے کے ہاتھ میں تھما رہا ہوتا ہے ۔یہ جراثیم کرنسی نوٹوں کے ذریعے بھی ایک دوسرے تک منتقل ہوجاتے ہیں۔

گھروں میں تو شاید لوگ کھانے سے پہلے ہاتھ دھوہی لیتے ہوں لیکن دیکھا گیا ہے کہ ہوٹلوں میں ذیادہ تر افراد ہاتھ دھوئے بغیر ہی کھانا شروع کر دیتے ہیں ۔اس کی ایک بڑی وجہ یہ بھی ہوتی ہے کہ بعض اوقات نامی گرامی ہوٹلوں میں بھی ہاتھ دھونے کا مناسب انتظام نہیں ہوتا اگر ایسا ہو بھی تو وہاں صابن موجود نہیں ہوتا۔

بیماریوں کا شکار ہونے والوں میں وہ بچے بھی شامل ہیں جو اپنے ماں باپ کے ہاتھ سے کھاتے ہیں تو یہاں ان والدین کی ذمہ داری بھی ہے کہ وہ اپنے ہاتھوں کو صاف ستھرا رکھیں تاکہ خود کو بھی اور اپنے معصوم پھولوں کی زندگیوں کوبھی محفوظ بنا سکیں۔

ہاتھ نہ دھونے سے ہونے والی اہم بیماریاں 

جراثیم کی جسم کے ایک حصے سے دوسرے حصے منتقلی روکنے کے لیے ہاتھ دھونا بہت ہی کارآمد عمل ہے کیوں کہ بہت سے امراض گندے ہاتھوں کے ذریعے ہی منتقل ہوتے ہیں۔ ہاتھوں کو اچھی طرح دھونے سے مندرجہ ذیل بیماریاں لاحق ہوسکتی ہیں

(Diarrhea) اسہال /ڈائیریا
(Dysentery) پیچش

(Cholera) ہیضہ

(Hepatitis) ہیپاٹائٹس

(Typhoid fever) ٹائیفائیڈ بخار
(Influenza) انفلوئنزا
(Pneumonia) نمونیہ
(Gastroenteritis) پیٹ کی مختلف بیماریاں

صورت حال جس میں ہاتھ دھونا نہایت ضروری ہے

بچوں کے ارد گرد صفائی کو بہتر بنانا ہی ان کو بیماریوں سے بچنے میں مدد کر تا ہے۔نیز ہاتھ دھونے کو فروغ دینا بچوں کی اموات کی شرح کو کم کرنے اور ترقیاتی مقاصد کو حاصل کرنے کے لیے بھی ضروری ہے۔درج ذیل صورت حال میں سے کسی ایک کے بھی وقوع پذیر ہونے پر ہاتھ دھونا بہت ضروری ہے ورنہ آپ اوپر بیان کردہ بیماریوں میں سے کسی میں بھی مبتلا ہو سکتے ہیں۔

کھانے سے پہلے
ٹوائلٹ استعمال کرنے کے بعد
کھانسنے اور چھینکنے کے بعد
ناک صاف کرنے کے بعد
زخموں کو چُھونے کے بعد
بچے کی لنگوٹ تبدیل کے بعد
مریض کی دیکھ کرنے کے بعد
پالتو جانوروں کو چُھونے کے بعد
جانوروں کے کھانے یا ان کے فضلہ جات کو چُھونے کے بعد
کوڑے کو ہاتھ لگانے کے بعد

ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ ہم مندرجہ بالا ضروری ہدایات پر عمل کریں کیونکہ ہاتھ دھونا پیچش ، ہیضہ اور ہیپاٹائٹس ، اسہال کے ساتھ ساتھ اور بہت سی بیماریوں کو ختم کرنے میں بھی مدد کرتا ہے۔نیز ہوٹل انتظامیہ کو بھی چاہئیے کہ وہ ہاتھ دھونے کا مکمل انتظام کریں۔ اس کے علاوہ فوڈ انسپکٹر کی بھی ذمہ داری ہے کہ وہ ہوٹلوں میں ہاتھ دھونے والی جگہ کا معائنہ کریں اور وہاں ہاتھ دھونے کا مناسب انتظام نہ ہونے اور صابن نہ ہونے پرہوٹل مالکان کو جرمانہ عائد کریں۔انہی چند اقدامات پر عمل کرنے سے بہت سی بیماریوں سے بچا سکتا ہے اور لاکھوں زندگیوں کو محفوظ بنا یاجاسکتا ہے۔

The following two tabs change content below.