سرکےایک حصے میں درد کی 6 وجوہات جو خطرناک ثابت ہوسکتیں ہیں۔

Reading Time: 3 minutes

سردرد کا  سامنا اپنی زندگی میں سب کو کرنا پڑتا ہے۔ہم سردرد میں  اچانک یا آہستہ آہستہ مبتلا ہوسکتے ہیں۔اس کی کافی وجوہات بھی ہوسکتیں ہیں۔بعض اوقات ایسابھی ہوتا ہے کہ درد گردن،دانتوںاورآنکھوں کے پیچھے تک پھیل جاتا ہے۔جن افراد کواس درد کے مسئلے سے دوچارہونا پڑتا ہےوہ بتا سکتے ہیں کہ یہ کیسے آپ کی روزمرہ کی سرگرمیوں کو متاثر کرتا ہے۔

بعض اوقات درد صرف ایک حصے میں ہوسکتا ہے۔جو آپ کو بے چینی میں مبتلا کر سکتا ہے۔دماغ کے بائیں یا دائیں حصے میں درد شدت سے ہوسکتا ہے۔جس کا بہت سے افراد کو سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔لیکن اس درد کی کیا وجوہات ہوسکتیں ہیں یہ جاننا بھی ضروری ہے۔

اگرآپ سرکے ایک حصے کی  دردمیں مبتلا ہیں  تو اس کی کیا وجوہات ہوسکتیں ہیں یہ جاننے کے لیے یہ بلاگ پڑھیں۔جوآپ کے لئے مددگا ثابت ہوگا۔

سر کے ایک حصے میں درد کی وجوہات-

ایک حصے میں درد کن وجوہات کی بنا پر ہوتا ہے وہ وجوہات مندرجہ ذیل ہیں؛

روزمرہ کے عوامل-

اس درد میں روز مرہ کے عوامل بھی شامل ہوسکتے ہیں جس وجہ سے ہم اس درد میں مبتلا ہوتے ہیں۔سر کے ایک حصے کی درد کو درد شقیقہ یا مائگرین بھی کہا جاتا ہے۔جو شدت اختیار کرسکتا ہے۔

گلوکوز کا استعمال-

ہمارے دماغ کے افعال کو بہتر طریقے سے کام کرنے کے لئے گلوکوز کی مناسب مقدار کی ضرورت ہوتی ہے۔جب ہم اس کا استعمال نہیں کرتے توہمارے جسم میں شوگر لیول کی مقدار کی سطح گر جاتی ہے،جسے ہائپوگلیسیمیا کہا جاتا ہے۔یہ بھی سرمیں درد کی علامت ہے۔

الکحل کا استعمال-

ایسے مشروبات کا استعمال جن میں الکحل شامل ہو وہ بھی درد کا سبب بن سکتے ہیں۔اس لئے سافٹ ڈرنکس کا کم استعمال کرناچاہیے تاکہ ہم سنگین صورتحال سے بچ سکیں ۔ان میں کیمکلز کا استعمال ہوتا ہے جو درد کی وجہ بنتا ہے۔

تناؤ-

سر

جب آپ دباؤ یا پریشانی کا شکار ہوتے ہیں توہیلتھ لائن ویب کے مطابق آپ کا  جسم ایک کیمیکل فائٹ یا فلائٹ جاری کرتا ہے۔یہ کیمکل ہمارے پٹھوں میں تناؤ پیدا کرتا ہے۔اس کے علاوہ یہ خون کے بہاؤ کو بھی تبدیل کردیتا ہے۔ جس وجہ سے آپ سردرد کا شکار ہوسکتے ہیں۔

نیند کی کمی-

نیندکی کمی ہمیں نہ صرف اس درد میں مبتلا کرتی ہے بلکہ اور بھی بہت سے مسائل نیند کی کمی کی وجہ سے ہوتے ہیں۔جب ہم اس درد میں مبتلا ہوجاتے ہیں تب سونابھی مشکل ہوجاتا ہے۔اس لئے اس درد سےکے لئے اچھی نیند لینا بہت ضروری ہے۔

انفیکشن کی وجہ سے-

سر

سردرد اکثر سانس میں انفیکشن کی وجہ سے بھی ہوتا ہے۔فلواور زکام، بھی اس درد کی وجہ بنتےہیں۔اکثر سردیوں میں سردی لگنے اور فلو کی وجہ سے ہم اس درد میں مبتلا ہوتے ہیں۔

دواکا زیادہ استعمال-

دواؤں کا زیادہ استعمال جو ہم ہفتے میں دوسےتین دن سے زیادہ استعمال کرتے ہیں جو سردرد کا علاج کرتیں ہیں تو ان کی وجہ سے بھی سردرد رہ سکتا ہے۔

آپ کن طریقوں کی مدد سے اس مائگرین سے نجات پاسکتے ہیں اس کے لئے یہاں کلک کریں۔

سردرد کی دیگر وجوہات-

ہائی بلڈ پریشر

عام طور پر ہائی بلڈ پریشر درد کا سبب نہیں بنتا لیکن کچھ لوگوں میں یہ درد کی وجہ بن سکتا ہے۔

ہجوم

ہجوم یا شور بھی درد کا باعث بنتا ہے۔ٹریفک کا شور یا رش آپ کو اس درد میں ڈال سکتا ہے۔

اسٹروک

خون کے جمنے سے دماغ کی رگیں بند ہوجاتیں ہیں۔جوخون کے بہاؤ کو روک کر فالج کا باعث بن سکتے ہیں۔دماغ کے اندر خون بہنا بھی فالج کی علامت ہوسکتی ہے۔اچانک شدید سردردفالج کی علامت ہوسکتی ہے۔

دنیا میں تقریبا50 فیصد بالغ افراد اس درد میں مبتلا ہوتے ہیں۔ہمیں اس کو ہلکا نہیں لینا چاہیے اور فوری علاج کرنا چاہیے تاکہ ہم سنگین صورتحال سے بچ سکیں۔اس درد کی بہت سی اقسام ہیں لیکن کسی کی بھی وجہ نہیں معلوم۔بہت سے  افراد پریشانی اور ٹینشن میں بھی ایک حصے کی درد میں مبتلا ہوتے ہیں۔

اگر ہم ڈپریشن اور ٹینشن سے بچتے ہیں تو اس درد سے بھی چھٹکارا حاصل کرسکتے ہیں۔ہم روز مرہ  اپنی  زندگی میں آرام اور تبدیلی لا کر بھی اس سے محفوظ رہ سکتے ہیں۔

ہمیں کب ڈاکٹر سے ملنا ہے؟-

اگر آپ مسلسل اس میں مبتلا رہتے ہیں تو آپ کو ڈاکٹر سے ملنے کی ضرورت ہے اس کے لئے آپ کے پاس ایک آسان حل ہے،آپ گھر بیٹھے مرہم ڈاٹ  پی کے کی ویب سے ڈاکٹر سے اپائنمنٹ لے سکتے ہیں اس کے علاوہ وڈیو کنسلٹیشن یا اس نمبر پر 03111222398 آن لائن کنسلٹشن لے سکتے ہیں۔

 

The following two tabs change content below.
Avatar
I developed writing as my hobby with the passing years. Now, I am working as a writer and a medical researcher, For me blogging is more of sharing my knowledge with the common audiences