کولیسٹرول لیول کو کم کرنے کے پانچ آزمودہ طریقے جو صحت مند رکھنے میں مدد دیں

Reading Time: 3 minutes

کولیسٹرول جگر میں بننے والا وہ کیمائی مادہ ہے جو کہ بہت اہم کام انجام دیتا ہے ۔ یہ خلیات کی دیواروں کو نرمی فراہم کرتا ہے ۔ اس کے علاوہ جسم کے کئي اہم ہارمون کے افراز میں مددگار ثابت ہوتا ہے ۔ مگر اس کی زیادتی صحت کے لیۓ کئی حوالوں سے خطرناک ثابت ہو سکتی ہے

لیپو پروٹین  کے خون کے اندر بڑھنے کی صورت میں یہ خون کی شریانوں میں جمع ہو جاتی ہے۔  اس سے یہ شریانیں بلاک ہو سکتی ہیں جو کہ دل کےدورے یا گردوں کے ناکارہ کرنے کا باعث بن سکتے ہیں

کولیسٹرول کی شرح کو کم کرنے طریقے

اپنی طرز زندگی میں کچھ تبدیلیاں کر کے ہم خون میں اس  کے لیول کو نہ صرف کم کر سکتے ہیں ۔بلکہ اس کو آئندہ بڑھنے سے بھی روک سکتے ہیں

تلی ہوئی اشیا سے پرہیز

عام طور پر مضر صحت گھی یا آئل میں تلی ہوئي اشیا خون میں اس کی شرح بڑھانے کا باعث بنتی ہیں ۔ اس وجہ سے سب سے پہلے تو کولیسٹرول لیول کے بڑھے ہونے کی صورت میں، تلی ہوئی اشیا کا استعمال یکسر ترک کر دینا بہتر ہے ۔اس کے بعد عام کھانے کو بھی ایسے آئل میں پکایا جاۓ ،جو کہ مونو سیچیوریٹڈ ہو

ایسے آئل میں زيتون کا تیل ، کینولا آئل شامل ہے ۔اسکے علاوہ ایسی چکنی چیزوں کا استعمال کریں جن میں اومیگا 3 موجود ہو۔ کیوں کہ اس کا استعمال خون میں سے کولیسٹرول کو کم کرنے کا باعث بنتا ہے ۔ مچھلی کے گوشت کے اندر اومیگا 3 موجود ہوتا ہے ۔ جو کہ کولیسٹرول کو کم کرتا ہے

کولیسٹرول

فائبر والی غذاؤں کا استعمال

فائبر سے مراد وہ اجزا ہیں جو کہ پودوں کے اندر موجود ہوتے ہیں ۔ معدے میں موجود بیکٹیریا اس فائبر کے ذریعے کولیسٹرول کو خون میں جزب کرنے میں مدد دیتے ہیں ۔لہذا ایسی تمام غذائیں جن میں فائبر کی مقدار زیادہ ہوتی ہے۔ وہ خون میں کولیسٹرول کی شرح کو کم کرنے میں معاون ثابت ہوتے ہیں

باقاعدگی سے ورزش کرنا

باقاعدگی سے ورزش کرنا نہ صرف موٹاپے کا خاتمہ ہوتا ہے۔ بلکہ اس سے دل کی کارکردگی میں بھی اضافہ ہوتا ہے ۔ اس کے ساتھ یہ خون میں نقصان دہ کولیسٹرول کے لیول کو کم کر کے صحت مند کولیسٹرول کے لیول میں اضافہ کرتا ہے ۔ ڈاکٹرز کے مطابق دن میں آدھہ گھنٹہ روزانہ ورزش کرنے سے نہ صرف کولیسٹرولیول کم ہوتا ہے ۔بلکہ اس کے ساتھ ساتھ اس میں اضافے کی بھی روک تھام ہوتی ہے

کولیسٹرول کم کرنے کے لیۓ وزن کم کرنا

بڑھا ہوا وزن جگر کو زیادہ کولیسٹرول پیدا کرنے پر مجبور کرتا ہے جو لوگ اپنے وزن کو کم کرنے کے لیۓ ڈائٹنگ کرتے ہیں ان کے خون میں کولیسٹرول کی شرح میں واضح کمی دیکھنے میں آتی ہے

کولیسٹرول

تمباکو نوشی سے پرہیز

تمباکو نوشی دل کی بیماریوں کا سبب بن سکتی ہے اس کے ساتھ ساتھ اس کی وجہ سے ہمارے جسم کےمدافعتی خلیۓ کولیسٹرول کو خون کے بہاؤ میں شامل کرنے کے بجاۓ دیواروں پر جما دیتے ہیں جس سے یہ خطرناک ثابت ہو سکتے ہیں

کولیسٹرول کی دوا کے لیۓ ڈاکٹر سے رجوع کرنا

اگر طرز زندگی میں تبدیلی کے باوجود بھی کولیسٹرول کے لیول میں کمی واقع نہ ہو سکے تو اس کا واضح مطلب یہ ہے کہ آپ کو ڈاکٹر کے مشورے کی ضرورت ہے اس وجہ سے اس صورت میں ڈاکٹر ایسے سپلیمنٹ کا استعمال کروائيں گے جو کہ کولیسٹرول کے لیول میں کمی کر سکیں

ڈاکٹر سے آن لائن مشورے کے لیۓ مرہم ڈاٹ پی کے کی ایپ ڈاون لوڈ کریں یا پھر 03111222398 پر رابطہ کریں

The following two tabs change content below.
Ambreen Sethi

Ambreen Sethi

Ambreen Sethi is a passionate writer with around four years of experience as a medical researcher. She is a mother of three and loves to read books in her spare time.

Leave a Comment